Get Even More Visitors To Your Blog, Upgrade To A Business Listing >>

آسٹریلیا نے بھی یروشلم کو اسرائیل کا دارالحکومت تسلیم کرلیا

آسٹریلیا نے بھی یروشلم کو اسرائیل کا دارالحکومت تسلیم کرلیا

آسٹریلیا کی حکومت نے مغربی یروشلم کو اسرائیل کا دارالحکومت تسلیم کرنے کا اعلان کیا ہے لیکن کہا ہے کہ وہ فی الحال تل ابیب سے اپنا سفارت خانہ یروشلم منتقل نہیں کرے گی۔

مغربی یروشلم کو اسرائیل کا دارالحکومت تسلیم کرنے کا اعلان آسٹریلیا کے وزیرِ اعظم اسکوٹ موریسن نے ہفتے کو ایک بیان میں کیا ہے۔

بیان میں آسٹریلیا کے وزیرِ اعظم نے کہا ہے کہ اسرائیلیوں اور فلسطینیوں کے درمیان امن معاہدہ ہونے تک ان کا ملک اپنا سفارت خانہ یروشلم منتقل نہیں کرے گا۔

تاہم انہوں نے کہا کہ آسٹریلیا مغربی یروشلم میں اپنے دفاعی اور تجارتی دفاتر قائم کرے گا اور سفارت خانے کے لیے مناسب مقام کی تلاش بھی شروع کی جا رہی ہے۔

بیان میں وزیرِ اعظم موریسن نے واضح کیا ہے کہ ان کا ملک مشرقی یروشلم کو فلسطین کا دارالحکومت صرف اسی وقت تسلیم کرے گا جب دونوں فریق تنازع کے دو ریاستی حل پر اتفاق کریں گے۔

امریکہ کے صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے گزشتہ سال یروشلم کو اسرائیل کا دارالحکومت تسلیم کرنے کے اعلان کیا تھا جس کےبعد رواں سال مئی میں امریکہ نے اپنا سفارت خانہ بھی تل ابیب سے یروشلم منتقل کردیا تھا۔

امریکہ کے اس فیصلے کا اسرائیل نے خیرمقدم کیا تھا جب کہ فلسطینیوں، مسلم دنیا اور امریکہ کے مغربی اتحادیوں نے اس اعلان پر سخت تحفظات ظاہر کیے تھے اور کہا تھا کہ اس سے اسرائیل فلسطین تنازع مزید گھمبیر ہوجائے گا۔

اسرائیل کی مسلسل کوششوں کے باوجود اب تک دنیا کے چند ایک ملکوں نے ہی امریکی فیصلے کی تائید میں یروشلم کو اسرائیل کا دارالحکومت تسلیم کرنے کا اعلان کیا ہے۔

آسٹریلوی وزیرِ اعظم موریسن نے پہلے پہل رواں سال اکتوبر میں اپنا سفارت خانہ تل ابیب سے یروشلم منتقل کرنے کا عندیہ دیا تھا جس پر انہیں اندرون و بیرون ملک کئی حلقوں کی جانب سے کڑی تنقید کا نشانہ بنایا گیا تھا۔

آسٹریلوی وزیرِ اعظم نے یہ اعلان ایک ایسے حلقے میں ہونے والے ضمنی انتخاب سے صرف چند روز قبل کیا تھا جہاں یہودیوں کی بڑی تعداد آباد تھی۔ لیکن اس اعلان کے باوجود حکمران جماعت ضمنی انتخاب ہار گئی تھی۔

اسرائیل نے 1967ء کے جنگ کے دوران یروشلم پر قبضہ کرلیا تھا جس کے بعد سے وہ پورے شہر کو اپنا دارالحکومت قرار دیتا ہے۔

اس کے برعکس بین الاقوامی برادری کا موقف ہے کہ یروشلم کے مستقبل کا تعین فلسطینیوں اور اسرائیلیوں کے درمیان مذاکرات سے ہونا چاہیے۔

فلسطینی مشرقی یروشلم کو اپنی مستقبل کی مجوزہ ریاست کا دارالحکومت قرار دیتے ہیں اور ان کا موقف ہے کہ اسرائیل کے ساتھ کوئی بھی ممکنہ امن معاہدہ اسی صورت میں ممکن ہے جب وہ یروشلم پر اپنے دعوے سے دستبردار ہو۔

The post آسٹریلیا نے بھی یروشلم کو اسرائیل کا دارالحکومت تسلیم کرلیا appeared first on Urdu Khabrain.



This post first appeared on Urdu News - Urdu Khabrain, please read the originial post: here

Share the post

آسٹریلیا نے بھی یروشلم کو اسرائیل کا دارالحکومت تسلیم کرلیا

×

Subscribe to Urdu News - Urdu Khabrain

Get updates delivered right to your inbox!

Thank you for your subscription

×